Tags » Argentine

La main de Dieu vs La main de la honte

Qui ne se souvient pas de “la main de Dieu”, l’un des buts les plus célèbres de l’histoire du football. Cette expression fait référence à l’expression utilisée par Diego Maradona pour qualifier son but marqué volontairement avec la main, contre l’Angleterre (score final 2-1 pour l’Argentine) en quart de finale de la Coupe du Monde 1986, le 22 juin dans le stade Azteca (Mexique). 613 more words

Paz Pardo

Name: Paz Pardo

Hometown: Palo Alto, CA

Current Town: Somewhere between Austin, TX and Buenos Aires, Argentina

Affiliations: Just graduated from the MFA program at the Michener Center for Writers, UT Austin. 1,166 more words

1966

For almost 300 years Norway and Denmark were united kingdoms, and Danish was the sole official language. When the two countries separated in 1814 a linguistic struggle ensued in Norway with different versions of written and spoken Norwegian competing for official recognition. 392 more words

Spanish

فلسطینی بچوں کا مطالبہ رنگ لے آیا، ارجنٹینا اور اسرائیل کا میچ منسوخ

ارجنٹینا نے اسرائیل کے خلاف ورلڈ کپ 2018 کے لیے مقبوضہ بیت المقدس میں9 جون کو شیڈول اپنا آخری وارم اپ میچ منسوخ کر دیا۔ برطانوی اخبار دی گارجین کی رپورٹ کے مطابق ارجنٹینا کے اسٹرایئکر گونزالو ہنگوئین نے کہا ہے کہ ’ہم نے ٹھیک فیصلہ کر لیا‘، ساتھ ہی تصدیق کی کہ ارجنٹینا اور اسرائیل کے درمیان ہونے والا میچ منسوخ کیا جا چکا ہے۔ مذکورہ اعلان کے بعد فلسطینی فٹ بال ایسوسی ایشن (پی ایف اے) کی جانب سے ایک اعلامیہ جاری کیا گیا جس میں انہوں نے ارجنٹینا کے کپتان اور اسٹار فٹبالر لیونل میسی اور ان کی ٹیم کا میچ منسوخ کرنے پر شکریہ ادا کیا۔

پی ایف اے کے چیئرمین کی جانب سے جاری کردہ اس اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ ’پی ایف اے ارجنٹینا کے کپتان اور کھلاڑیوں کا کھیلوں کے برخلاف مہم کا حصہ بننے سے انکار پر بے حد مشکور ہے‘۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ جبرائیل رجب کا کہنا تھا کہ ’آج وارم اپ میچ کی منسوخی سے کھیل، اخلاقیات اور اقدار کی فتح ہوئی جبکہ اسرائیل کو ریڈ کارڈ دکھا دیا گیا‘۔ خیال رہے کہ چند روز قبل یہ اطلاعات سامنے آئیں تھیں کہ فٹبال ورلڈ کپ سے قبل ارجنٹائن اور اسرائیل کے درمیان ہونے والے دوستانہ میچ پر فلسطینی بچوں نے احتجاج کرتے ہوئے عالمی شہرت یافتہ فٹبالر لیونل میسی سے یہ میچ نہ کھیلنے کی درخواست کی تھی۔

دونوں ملکوں کے درمیان جاری تاریخی تنازع اور حال ہی میں فلسطینی عوام پر کی گئی اسرائیلی فوج کے ظلم و ستم کے بعد 70 فلسطینی بچوں پر مشتمل گروپ نے ارجنٹائن کے فٹ بالر لیونل میسی کو خط لکھ کر درخواست کی تھی کہ وہ اسرائیل کے خلاف دوستانہ میچ میں شرکت نہ کریں۔ مذکورہ خط 3 جون کو اسرائیل میں ارجنٹائن کے سفارتخانے کے حوالے کیا گیا جس میں فلسطینی بچوں نے دعویٰ کیا کہ وہ ان خاندانوں کے بچے ہیں جن سے چھینی گئی زمینوں پر اب ٹیڈی اسٹیڈیم دوبارہ قائم کیا گیا ہے۔

خط کے متن میں مزید کہا گیا تھا کہ ’ہمیں بتایا گیا ہے کہ آپ ہمارے تباہ شدہ گاؤں پر تعمیر شدہ اسٹیڈیم میں اپنے دوستوں کے ساتھ میچ کھیلنا چاہتے ہیں جس پر ہماری خوشی اس وقت آنسوؤں میں بدل گئی اور ہمارے دل ٹوٹ گئے کہ ہمارا ہیرو میسی ہمارے آباؤ اجداد کی قبروں پر تعمیر ہونے والے اسٹیڈیم میں کھیلنے جا رہا ہے‘۔ فلسطینی بچوں نے کہا کہ 9 جون کو جب اسرائیل اور ارجنٹینا دوستانہ میچ کھیلیں گے تو یہ ہمارے لیے ایک اداس دن ہو گا اور خط کے اختتام کچھ یوں کیا کہ ‘آئیے، ہم خدا سے دعا کریں کہ میسی ہمارے دلوں کو نہ توڑیں‘۔

World

CIA’s War on Argentina

Bellow are some of the Articles on South America:

Geopolitics

Penitentes at Plaza de Mulas, base camp for climbers approaching Mount Aconcagua, Argentina

Penitentes at Plaza de Mulas, base camp for climbers approaching Mount Aconcagua, Argentina