Tags » Insulting Islam

توہین مذہب اور توہین قرآن کا الزام ثابت ہونے پر گورنرکو2 سال قید کی سزا

جکارتہ -انڈونیشیا کی عدالت نے توہین مذہب کاالزام ثابت ہونے پر دارالحکومت جکارتہ کے غیر مسلم گورنر کو دوسال قید کی سزا سنادی ہے۔ غیر ملکی خبر رساں ادارے’ اے پی‘ کی رپورٹ کے مطابق انڈونیشیا کی سپریم کورٹ نے جکارتہ کے گورنر جن کا مذہب عیسائی ہے کو توہین مذہب اور توہین قرآن کا الزام ثابت ہونے پر 2 سال قید کی سزا سنادی ہے ۔

عدالت کے 5 رکنی بنچ نے گورنر بسوکی تجاھاجہ پرنامامہ کو توہین مذہب میں قصوروار ٹھہراتے ہوئے فوری طور پر گرفتار کرنے کا حکم دیا۔گورنر نے سزا کے بعد بات کرتے ہوئے کہا کہ وہ دوسالہ سزا کے خلاف اپیل کریں گے جبکہ عدالت کے باہر گورنر کے حمایتی رونے لگے اور ایک دوسرے کو گلے لگانے لگے۔فیصلہ سنائے جانے کے موقع پر عدالت کے باہر فوج اور پولیس کی بھاری نفری کو تعینات کیا گیا تھا جبکہ بسکوی انڈونیشیا کی 50 سالہ تاریخ میں پہلے عیسائی گورنر ہیں۔

گورنر پر الزام تھا کہ انہوں نے گزشتہ برس انتخابی مہم کے دوران ایک متنازع بیان جاری کیا تھا کہ مسلمان ایک قرآنی آیت کے استعمال سے انہیں تنقید کا نشانہ بنارہے ہیں جبکہ بعد میں انہوں نے اپنے اس بیان سے معذرت کرلی تھی :-

News

Sentenced to Death for "Insulting Islam"

Source: The Gatestone Institute, by Majid Rafizadeh

  • Can you imagine making a joke and facing death as a result?
  • “During his interrogation, Sina was told that if he signed a confession and repented, he would be pardoned and let go,” said the source in an interview with CHRI on March 21, 2017.
723 more words

Pure Evil