Tags » Khutbah

Friday prayer manners

Listen quietly to the Khutba – Friday prayer

It is recommended to proceed early for Friday prayers, reach Masjid in time, take a place and listen quietly to the Khutba. 300 more words

Prayer

Nojawaanon kay liyay Naseehat

بسم الله الرحمن الرحيم

فضیلۃ الشیخ ڈاکٹر جسٹس حسین بن عبد العزیز آل الشیخ حفظہ اللہ نے 12-ربیع الثانی- 1437کا خطبہ جمعہ مسجد نبوی میں بعنوان ” نوجوانوں کیلیے نصیحتیں” ارشاد فرمایا ، جس کے اہم نکات یہ تھے: ٭نوجوان امیدوں کا گہوارہ٭ جوانی کی اہمیت و مقام٭ نوجوانوں کی بہتری امت کی کامیابی٭ نوجوانوں کو در پیش مسائل اور حل ٭ علمائے کرام اور واعظین کی ذمہ داریاں٭ جوانی کے جوش کو ہوش میں قید کریں٭ نئے تعلیمی سیمسٹر کے آغاز پر اساتذہ کرام کو یاد دہانی٭ سعودی جوانوں کو نصیحت٭ شیطان کے دہرے وار سے بچنے کا طریقہ٭ جوانی میں اپنے آپ کو رحمدل بنائیں٭ اخلاق حسنہ کے پیکر بنیں٭ کینہ و کدورت کے امت پر اثرات٭ ناحق قتل کی سزا ٭ امت مسلمہ کو جھنجھوڑ دینے والے سوالات ۔

پہلا خطبہ

یقینا تمام تعریفیں اللہ رب العالمین کیلئے ہیں، ہم اسکی کی تعریف بیان کرتے ہوئے اسی سے مدد و ہدایت کے طلب گار ہیں اور اپنے گناہوں کی بخشش بھی مانگتے ہیں، اور نفسانی و بُرے اعمال کے شر سے اُسی کی پناہ چاہتے ہیں، جسے اللہ ہدایت عنایت کر دے اسے کوئی بھی گمراہ نہیں کر سکتا، اور جسے وہ گمراہ کر دے اسکا کوئی بھی رہنما نہیں بن سکتا، میں گواہی دیتا ہوں کہ اللہ کے سوا کوئی بھی معبودِ بر حق نہیں ، اور اسکا کوئی بھی شریک نہیں، اور میں یہ بھی گواہی دیتا ہوں محمد اللہ بندے اور اسکے رسول ہیں، یا اللہ! ان پر، ان کی آل، اور صحابہ کرام پر رحمتیں، سلامتی، اور برکتیں نازل فرما۔

{يَا أَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُوا اتَّقُوا اللَّهَ حَقَّ تُقَاتِهِ وَلَا تَمُوتُنَّ إِلَّا وَأَنْتُمْ مُسْلِمُونَ} اے ایمان والو! اللہ سے ایسے ڈرو جیسے ڈرنے کا حق ہے اور تمہیں موت صرف اسلام کی حالت میں ہی آئے۔[آل عمران : 102]

{يَا أَيُّهَا النَّاسُ اتَّقُوا رَبَّكُمُ الَّذِي خَلَقَكُمْ مِنْ نَفْسٍ وَاحِدَةٍ وَخَلَقَ مِنْهَا زَوْجَهَا وَبَثَّ مِنْهُمَا رِجَالًا كَثِيرًا وَنِسَاءً وَاتَّقُوا اللَّهَ الَّذِي تَسَاءَلُونَ بِهِ وَالْأَرْحَامَ إِنَّ اللَّهَ كَانَ عَلَيْكُمْ رَقِيبًا} لوگو! اپنے اس پروردگار سے ڈرتے رہو جس نے تمہیں ایک جان سے پیدا کیا پھر اسی سے اس کا جوڑا بنایا پھر ان دونوں سے [دنیا میں] بہت سے مرد اور عورتیں پھیلا دیں ، نیز اس اللہ سے ڈرو جس کا واسطہ دے کر تم ایک دوسرے سے اپنا حق مانگتے ہو اور قریبی رشتوں کے بارے میں بھی اللہ سے ڈرتے رہو ، بلاشبہ اللہ تم پر ہر وقت نظر رکھے ہوئے ہے [النساء : 1]

{يَا أَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُوا اتَّقُوا اللَّهَ وَقُولُوا قَوْلًا سَدِيدًا (70)يُصْلِحْ لَكُمْ أَعْمَالَكُمْ وَيَغْفِرْ لَكُمْ ذُنُوبَكُمْ وَمَنْ يُطِعِ اللَّهَ وَرَسُولَهُ فَقَدْ فَازَ فَوْزًا عَظِيمًا}ایمان والو! اللہ سے ڈرو، اور سچی بات کیا کرو، اللہ تعالی تمہارے اعمال درست کر دیگا، اور تمہارے گناہ بھی معاف کر دیگا، اور جو اللہ و اسکے رسول کی اطاعت کرے وہ بڑی کامیابی کا مستحق ہے۔[الأحزاب: 70، 71]

امتِ اسلامیہ!

پوری امت کی نظریں نوجوانوں پر ہیں سب کی امیدیں انہی سے وابستہ ہیں، وہی دور حاضر کیلیے روحِ رواں اور مستقبل کے معمار ہیں، اسی لیے اسلامی تعلیمات نے نوجوانوں کی رہنمائی کو خصوصی طور پر موضوع سخن بنایا، فرمانِ باری تعالی ہے: {يَا أَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُوا قُوا أَنْفُسَكُمْ وَأَهْلِيكُمْ نَارًا} اے ایمان والو! اپنے آپ اور اپنے اہل خانہ کو آگ سے بچاؤ۔[التحريم : 6]

جوانی کے قیمتی لمحات انمول ہوتے ہیں، یہ قوت و توانائی میں اس کا کوئی ثانی نہیں ، اس لیے کامیابی کے کسی بھی امیدوار کی یہ ذمہ داری ہے کہ جوانی اللہ تعالی کی اطاعت میں گزارے اور جوانی کے شب و روز عبادتِ الہی سے بھر پور رکھے، قربِ الہی کی جستجو میں رہے، ہمہ وقت نفسانی اور شیطانی خواہشات کے مقابلے کیلیے جد و جہد کرے، آپ ﷺ کا فرمان ہے: (پانچ چیزوں کو پانچ چیزوں سے قبل غنیمت سمجھو، آپ نے ان پانچ چیزوں میں بڑھاپے سے پہلے جوانی کا بھی ذکر فرمایا) اسے احمد وغیرہ نے روایت کیا ہے۔

اس لیے مسلم نوجوانو! جوانی کے وقت کو اطاعتِ الہی کیلیے غنیمت سمجھو، ممنوعہ امور سے بچتے ہوئے احکاماتِ الہی اور تعلیماتِ نبوی کے سائے تلے آگے بڑھو، تو دنیا میں اچھے نتائج پاؤ گے، اور رب کریم کے ہاں بڑی کامیابی حاصل کر لو گے، آپ ﷺ کی یہ عظیم حدیث غور سے سنیں: (سات افراد کو اللہ تعالی سایہ نصیب فرمائے گا، جس دن اس کے سائے کے سوا کسی کا سایہ نہیں ہوگا، آپ ﷺ ان سات افراد میں اس نوجوان کا تذکرہ بھی کیا جو اللہ کی عبادت میں پروانے چڑھے) بخاری

مسلم اقوام!

یہ عظیم ترین احسانِ الہی ہے کہ اللہ تعالی بندے کو اپنی جوانی اطاعتِ الہی کیلیے صرف کرنے کی توفیق دے دے ،

All

Hudood or Sazaaon ka Islami Tasawwur

فضیلۃ الشیخ ڈاکٹر عبد الباری بن عواض ثبیتی حفظہ اللہ نے مسجد نبوی میں 28-ربیع الاول- 1437کا خطبہ جمعہ ” حدود اور سزاؤں کا اسلامی تصور” کے موضوع پر ارشاد فرمایا جس کے اہم نکات یہ تھے:٭ شریعتِ اسلامیہ کی خوبیاں٭ شریعتِ اسلامیہ کے مقاصد٭ شریعت اسلامیہ کے درخشاں پہلو ٭ نفاذِ شریعت کے فوائد اور ثمرات٭ جرائم کا علاج جرائم رونما ہونے سے پہلے٭ جرم کی نوعیت کے مطابق شرعی اقدامات٭ دہشت گردوں کی قرآنی سزا٭ شرعی حدود پر موشگافی کرنے والوں کا دوہرا معیار٭ قصاص اور حدود معاشرے کے تحفظ کے ضامن٭ سزائے موت پانے والوں کی حقیقت٭ سزائے موت کے خلاف غیر ذمہ دارانہ گفتگو کرنے والوں کی اصلیت٭ عسکری جوانوں کو خراج تحسین ٭ باغیوں کیلیے نبوی سزا: قتل ٭ مجرم کی سزا گناہ مٹانے کا باعث ٭ سزا یافتہ شخص کو برے الفاظ سے یاد کرنا جائز نہیں۔ 6 more words

All

Shar'aee Hudood awr Sazāein...

بسم الله الرحمن الرحيم

فضیلۃ الشیخ پروفیسر ڈاکٹر علی بن عبد الرحمن الحذیفی نے 05-ربیع الثانی- 1437 کا خطبہ جمعہ مسجد نبوی میں بعنوان “شرعی حدود اور سزائیں رحمت الہی کا حسین مظہر” ارشاد فرمایا جس کے اہم نکات یہ تھے: ٭رحمتِ الہی کی وسعت٭ رحمتِ الہی کے مظاہر٭ حدود اور شرعی سزائیں بھی رحمت ٭ گناہ کی سزا فوری نہ ملنا بھی رحمت ٭ قدرتی آفات اخروی عذاب کی یاد دہانی٭ قدرتی آفات اور شرعی سزاؤں کے مابین تجزیہ٭ عمر رضی اللہ عنہ کی نصیحت٭ شریعت سے رو گردانی کرنے والوں کا انجام٭ احکاماتِ الہی کے زندگی پر اثرات٭ واجبات اور ممنوعہ اعمال بدن کیلیے بالترتیب غذا اور زہر ٭ شرعی حدود کے پانچ بنیادی مقاصد ٭ حدود کے بارے میں زبان درازی کرنے والے ہوش کے ناخن لیں٭ مجرم پر شرعی حد کے مثبت اثرات٭ دورِ حاضر میں خارجیوں اور تکفیریوں سے بچیں٭ اسلامی عسکری اتحاد ٭ عسکری اتحاد میں شامل ممالک کی ذمہ داریاں ٭ نوجوانوں کی ذمہ داریاں۔
پہلا خطبہ:
تمام تعریفیں اللہ کیلیے ہیں جس نے بندوں کو شریعت دے کر ان پر رحم کیا، ان پر جود و کرم اور نعمتوں کے خزانے بہائے، وہ تمام لوگوں کے اعمال شمار کر رہا ہے، وہ اطاعت گزاری پر ثواب دیتا ہے اور نا فرمانی کی صورت میں ابتدائی طور پر در گزر فرماتا ہے فوری سزا نہیں دیتا، چنانچہ اگر انسان توبہ کر لے تو پروردگار بندے کی توبہ پر خوش ہوتا ہے، میں گواہی دیتا ہوں کہ اللہ کے سوا کوئی معبود نہیں وہ یکتا ہے، الوہیت و ربوبیت میں اس کا کوئی شریک نہیں ، میں یہ بھی گواہی دیتا ہوں کہ ہمارے نبی جناب محمد ﷺ اللہ کے بندے اور اس کے رسول ہیں ، آپ کو اللہ تعالی نے تمام مخلوقات پر فضیلت سے نوازا، یا اللہ! اپنے بندے، اور رسول محمد ، ان کی آل اور صحابہ کرام پر درود و سلام اور برکتیں نازل فرما۔
حمد و صلاۃ کے بعد:
تقوی الہی اختیار کرو، تقوی کو وسیلہ بناؤ، تمہیں اللہ تعالی کی طرف سے تحفظ، رحمت، اور رضا حاصل ہوگی، نیز اللہ تعالی کے غضب ، عذاب، اور رسوائی سے بچ جاؤ گے۔
مسلم اقوام!
میں آپ سب کو رحمتِ الہی کے بارے میں یاد دہانی کروانا چاہتا ہوں، جس رحمت کی خوش خبری اللہ تعالی نے قرآن مجید کی ہر سورت کی ابتدا میں {بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيمِ} کہتے ہوئے دی ہے، بلکہ کامل صفتِ رحمت کیساتھ اپنے آپ کو بہت سی آیات میں موصوف بھی کیا ، اسی طرح رسول اللہ ﷺ نے بھی اللہ تعالی کی صفتِ رحمت بہت سی احادیث میں بیان فرمائی۔

All

PROPHET ‘EYSA – PEACE BE UPON HIM

IN THE NAME OF ALLAH, THE BENEFICENT, THE MERCIFUL

BEING THE SECOND SERMON FOR THE MONTH OF R/AWWAL 14/R. AWWAL/1437AH (25/DEC/2015CE)

PROPHET ‘EYSA – PEACE BE UPON HIM… 2,833 more words

News

Musafir Cerdas

Seorang musafir lewat di suatu kampung. Ia melihat penduduk kampung lagi berkumpul ramai sekali. Mereka sepertinya lagi mengadakan musyawarah besar.

Setelah mencari tahu, ternyata penduduk kampung itu lagi membicarakan siapa yang mau menjadi ketua kampung. 333 more words

Halawate Imān, Asbāb or Alamāt

بسم الله الرحمن الرحيم

فضیلۃ الشیخ ڈاکٹرعبد الباری بن عواض الثبيتی حفظہ اللہ نے 16- ذو الحجہ 1435کا خطبہ جمعہ ” حلاوتِ ایمان،،، اسباب، علامات، اور اقسام” کے موضوع پر ارشاد فرمایا جس میں انہوں نے ایمانی مٹھاس حاصل کرنے کے اسباب حدیث نبوی کی روشنی میں بیان کرتے ہوئے اسکی علامت بھی ذکر کیں، انہوں نے سلف صالحین و صحابہ کرام کی زندگی سے اس کیلئے کچھ نمونے بھی پیش کئے، اور آخر میں انہوں نے ہر عبادت سے حاصل ہونے والی مٹھاس کا تذکرہ کیا۔ 23 more words

All