Tags » Muhammad Ali Jinnah

Fatimah Jinnahs legacy

What happened with Mother of the Nation – Fatimah Jinnah @Shahidmasooddr http://t.co/GhcWg6rDRn #Pakistan

— Mohammad Ali Jinnah (@MohamadAliJinah) February 22, 2015

Fatimah Jinnah, sister of Muhammad Ali Jinnah, the founder of Pakistan.

1,187 more words
Pakistan

When I Almost Met Muhammad Ali Jinnah

Ever since i was a little boy I’ve been fascinated by history, particularly the history of wars and warfare. I used to imagine traveling back in time and meeting any of the great leaders in history. 803 more words

Articles

Muhammad Ali Jinnah

Muhammad Ali Jinnah born Mahomedali Jinnahbhai; 25 December 1876 – 11 September 1948) was a lawyer, politician, and the founder of Pakistan. 1,077 more words

Pakistan

Quaid e Azam Muhammad Ali Jinnah (1876 . 1948)

A Brief Summary

Quaid-e-Azam Mohammad Ali Jinnah born in Karachi on December 20, 1876. He was a lawyer and also politician who fought for explanation for India’s independence from Britain, then shifted to found a Muslim talk about in Pakistan in 1947. 6,404 more words

All Posts

Change of Guard Ceremony at Mazar-e-Quaid

Military band performs during the Change of Guard Ceremony at Mazar e Quaid on the birthday anniversary of Quaid e Azam Muhammad Ali Jinnah.

Pakistan

اے قائد اعظم تیرا احسان ہے احسان....


یوں دی ہمیں آزادی کہ دنیا ہوئی حیران

اے قائد اعظم تیرا احسان ہے احسان

اے قائد اعظم تیرا احسان ہے احسان

تیرا احسان ہے تیرا احسان

ہر سمت مسلمانوں پہ چھائی تھی تباہی

ملک اپنا تھا اور غیروں کے ہاتھوں میں تھی شاہی

ایسے میں اٹھا دین محمد کا سپاہی

اور نعرہ تکبیر سے دی تو نے گواہی

اسلام کا جھنڈا لیے آیا سر میدان

اے قائد اعظم تیرا احسان ہے احسان

تیرا احسان ہے تیرا احسان

دیکھا تھا جو اقبال نے اک خواب سہانا

اس خواب کو اک روز حقیقت ہے بنانا

یہ سوچا جو تو نے تو ہنسا تجھ پہ زمانہ

ہر چال سے چاہا تجھے دشمن نے ہرانا

مارا وہ تو نے داؤ کہ دشمن بھی گئے مان

اے قائد اعظم تیرا احسان ہے احسان

تیرا احسان ہے تیرا احسان

لڑنے کا دشمنوں سے عجب ڈھنگ نکالا

نہ توپ نہ بندوق نہ تلوار نہ پھالا

سچائی کے انمول اصولوں کو سنبھالا

پنہاں تیرے پیغام میں جادو تھا نرالا

ایمان والے چل پڑے سن کر تیرا فرمان

اے قائد اعظم تیرا احسان ہے احسان

تیرا احسان ہے تیرا احسان

پنجاب سے بنگال سے جوان چل پڑے

سندھی ، بلوچی ، سرحدی پٹھان چل پڑے

گھر بار چھوڑ بے سرو سامان چل پڑے

ساتھ اپنے مہاجر لیے قرآن چل پڑے

اور قائد ملت بھی چلے ہونے کو قربان

اے قائد اعظم تیرا احسان ہے احسان

تیرا احسان ہے تیرا احسان

نقشہ بدل کے رکھ دیا اس ملک کا تو نے

سایہ تھا محمد کا ، علی کا تیرے سر پہ

دنیا سے کہا تو نے کوئی ہم سے نہ الجھے

لکھا ہے اس زمیں پہ شہیدوں نے لہو سے

آزاد ہیں آزاد رہیں گے یہ مسلمان

اے قائد اعظم تیرا احسان ہے احسان

تیرا احسان ہے تیرا احسان

ہے آج تک ہمیں وہ قیامت کی گھڑی یاد

میت پہ تیری چیخ کے ہم نے جو کی فریاد

بولی یہ تیری روح نہ سمجھو اسے بیداد

اسلام زندہ ہوتا ہے ہر کربلا کے بعد

اسلام زندہ ہوتا ہے ہر کربلا کے بعد

گر وقت پڑے ملک پہ ہو جائیے قربان

اے قائد اعظم تیرا احسان ہے احسان

تیرا احسان ہے تیرا احسان

Urdu