Tags » Warden

ESO Morrowind Will Kill ESO!

As a long term fan of not only Elder Scroll’s Online, but the entire Elder Scroll’s series as a whole, I have to say over the last year ESO has slowly and slowly gotten worse and worse. 795 more words

MMORPG

What's Going On - 4.17.17

Well it’s been busy for me the past few weeks. I gave notice with my job of 9 ½ years and started a new job last week. 182 more words

Random Shit

No Pens in the Pen

in the middle of the uprising

all the inmates

in all the jails and prisons

picked up their shanks

stuck them

authoritatively

to the page… 53 more words

Warden Series Easter Eggs!

I’m currently working on a new book series, but I wanted to talk about the books in my old book series for a moment.  All In:  The Globe Trot Shuffle, Cash Me Out:  Life and Death in Paradise, The Buildup to Operation Intense Freedom, Run The Table:  Operation Intense Freedom, and The Aftermath of Operation Intense Freedom. 1,125 more words

PRP3 The Author

FLAMES

India gives new meaning to the phrase going down in flames. Because apparently, now we don’t know the difference between discipline and inappropriate touching.

For those of you who have no idea what is this in reference to, you can Google UP Warden Strip searches 70 girls for menstrual blood. 344 more words

INDIA

وارڈن نے ستر لڑکیوں کے سکول میں ہی کپڑے اتروا دئیے ..لڑکیوں کے اہل خانہ سراپا احتجاج..وجہ کیا بنی؟؟ جان کرآپ بهی غصہ پر قابو نہ رکه پا ئیں گے...

بھارتی ریاست اترپریش کے علاقے مظفرنگر میں ایک سکول کی خاتون وارڈن نے ’حیض کا خون‘ چیک کرنے کیلئے 70 لڑکیوں کے سکول میں ہی کپڑے اتروا دئیے جس پر والدین سراپا احتجاج ہیں۔ واقعے کا علم ہونے پر سکول انتظامیہ نے وارڈن کو معطل کر دیا ہے۔یہ واقعہ کاستوربا گاندھی گرلز ریزیڈینشیل سکول میں اتوار کے روز پیش آیا جس دن کوئی بھی استاد سکول میں نہیں تھا۔ لڑکیوں نے بتایا کہ خاتون وارڈن نے ہمیں کپڑے اتارنے کا حکم دیا اور ایسا نہ کرنے پر مارنے کی دھمکی دی، واقعے کا علم ہونے پر لڑکیوں کے اہل خانہ سراپا احتجاج ہیں۔
ایک طالبہ نے بھارتی میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ باتھ روم میں خون کے چند داغ موجود تھے جنہیں دیکھنے کے بعد وارڈن نے لڑکیوں کو اپنے کپڑے اتارنے کا کہا۔ طالبہ نے بتایا کہ ”یہ ہم سب کیلئے بہت ہی زیادہ ذلت آمیز تھا اور ہم اس کے خلاف کارروائی چاہتے ہیں۔“
لڑکیوں کی شکایت اور اہل خانہ کے احتجاج کے بعد وارڈن کو معطل کر کے تحقیقات کا آغاز کر دیا گیا ہے تاہم وارڈن نے تمام الزامات کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ ” ایسا کچھ بھی نہیں ہوا۔ باتھ روم کے فرش اور دیوار پر خون کے داغ تھے۔ میں صرف تسلی کرنا چاہتی تھی کہ لڑکیوں کے ساتھ کوئی مسئلہ تو نہیں۔ ایسی نوجوان لڑکیاں بتا نہیں پاتیں۔۔۔ میں نے تو صرف ان سے پوچھا تھا کہ انہیں کسی قسم کا کوئی مسئلہ تو نہیں۔“وارڈن نے مزید کہا کہ”جب پڑھائی کی بات ہو تو میں سخت ہوں، اسی لئے لڑکیاں مجھے پسند نہیں کرتیں۔ انہیں عملے کے دوسرے افراد بھڑکا رہے ہیں جو مجھے پسند نہیں کرتے اور مجھے نکلوا دینا چاہتے ہیں۔“